36

نائن الیون میں بچنے والا امریکی تاجر کینیا حملے میں ہلاک

امریکا کے ورلڈ ٹریڈ سنٹر پر حملے میں زندہ بچ نکلنے والا امریکی بزنس میں کینیا کے دارالحکومت نیروبی میں ہوٹل پر ہونے والے حملے میں ہلاک ہوگیا ہے۔

گزشتہ شب یعنی 15 اور 16 جنوری کی درمیانی شب مسلح افراد نے کینیا کے دارالحکومت نیروبی میں ایک فائیو اسٹار ہوٹل پر حملہ کرکے کم ازکم 14 افراد کو قتل کیا جبکہ 700 افراد کو سیکیورٹی فورسز نے بحفاظت عمارت سے نکالا۔

بدھ کی صبح سیکیورٹی فورسز نے آپریشن ختم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ حملے میں کم از کم 14 افراد ہلاک ہوئے ہیں جبکہ تمام حملہ آوروں کو بھی موقع پر ہی قتل کیا گیا ہے۔

قتل ہونے والے 14 افراد میں 40 امریکی بزنس مین ’جیسن اسپنڈلر‘ بھی شامل ہے۔ جیسن اسپنڈلر 11 ستمبر 2001 کو امریکہ میں واقع ورلڈ ٹریڈ سینٹر پر ہونے والے حملے میں معجزانہ طور پر بچ گئے تھے۔

مقتول کے بھائی جوناتھن نے جیسن اسپنڈلر کی ہلاکت کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ وہ کاروبار کے سلسلے میں کافی عرصہ سے کینیا میں رہائش پذیر تھے۔

ورلڈ ٹریڈ سینٹر امریکی شہر نیویارک میں واقع ہے۔ امریکا کے مطابق القاعدہ نے بلند وبالا عمارت سے طیارے ٹکرائے جس میں کم از کم 2996 افراد جان سے گئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں